غزل……… شاعر عزیز پٹنوی

Untitled-1

ہجر کو وصل کی صورت نہیں ملنے والی ؟

اب مجھے اسُ کی   محبّت  نہیں  ملنے والی ؟

اب جو وحشت    کا     سبب   ہے  غم ِ  جاناں

یاروکیا کسی طوراِسےراحت نہیں ملنے والی ؟

کرب  ہی  کرب  اداسی  میں  گھلا  رہتا  ہے

کیا  ترے  عشق  میں  لذَّت  نہیں  ملنے والی ؟

چارہ گر اپنی توقع پہ نہیں پورے اترے ی

عنی اب ذھن کو فرصت نہیں ملنے والی !

شہر کا شہر ہراساں ہے غم ِتنہائی سے

یعنی اب بادَہ ءِ عشرت نہیں ملنے والی ؟

جوترے قرب کی خوشبوسے مہکتاتھاعزیز

کیا اسے پھر وہ سہولت نہیں ملنے والی ؟

Views All Time
122
Views Today
1
(Visited 104 times, 1 visits today)

5 Comments

  1. Bht khoob…….
    Jnb

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*

2 × 1 =