Author: Foozia Sheaikh

بھر کے لایا تھا جو دامن میں ستارے صاحب
Literature

بھر کے لایا تھا جو دامن میں ستارے صاحب

بھر کے لایا تھا جو دامن میں ستارے صاحب لے گیا لوٹ کے سب خواب ہمارے صاحب وہ تو آسودہ ھے حلقہ یاران میں ابھی یاد آئیں گے کہاں درد کے مارے صاحب ہجر میں سانس بھی رک رک کے چلا کرتی ھے کاش دے جاتا وہ کچھ سانس اُدھارے […]

غزل
Literature

غزل

احسن  الخلق کے کردار پہ افکار پہ خاک بے حسی کے یہ چھلکتے ھوئے اظھار پہ خاک بنتِ حوا کو میسر نہیں دو گز کی ردا ابن ِ آدم کے چمکتے ھوئے دستار پہ خاک آسماں چیرتی مظلوم کی آھوں کی قسم عظمت ِ بشر پہ لکھے ھوئے اشعار پہ […]

دل جسے کھوجنے اس بار در در نکلا
Literature

دل جسے کھوجنے اس بار در در نکلا

دل جسے کھوجنے اس بار جو در در نکلا وہ  اذیت  کا  جہاں  روح  کے   اندر  نکلا میں تو خود ساختہ زخموں کا پجاری ہوں میاں ایک   آسیب   زدہ   روح   میں  مندر  نکلا ہر  گھڑی  رویا  ہوں  اپنے ہی دلِ مرتد کو دشت  در  دشت […]